تازہ ترین

Post Top Ad

Monday, April 27, 2020

میپکو سب ڈویزن ہڑپہ کا ایس ڈی او اور لائن سپرنٹنڈنٹ کھمبے چوری کروا کے فروخت کروانے لگا




میپکو سب ڈویزن ہڑپہ سے ملحقہ گاؤں 18اے ڈبلیو ایم کے چوروں نے محکمہ کی ملی بھگت سے کھمبے چوری کر کے فروخت کرنا شروع کر دئیے۔ جب چور کھمبا چوری کر کے لیجا رہے تھے تو مقامی پولیس کے موقع پر پہنچنے پہ چور واردات کو سامان چھوڑ کر موقع سے فرار ہو گئے۔ جسے مقامی پولیس نے قبضہ میں لے کر کاروائی شروع کر دی تاہم 4 دن گزر نے کے باوجود بھی میپکو سب ڈویزن ہڑپہ کے ایس ڈی او اور لائن سپرنٹنڈنٹ کی جانب کوئی استغاثہ تھانہ ہذا میں نہ بھجوایا گیا، اور پولیس و محکمہ کو اطلاع دینے والے شہری کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دینے شروع کر دیں اس دوران چوروں کی جانب سے مقامی پولیس پر بھی کرپشن کے سنگین الزامات لگائے گئے۔ جب اطلاع دہندہ مقامی صحافیوں کو لیکر میپکو سب ڈویزن ہڑپہ پہنچا تو ایس ڈی او اور لائن سپرنٹنڈنٹ کھمبے چوری کرنے والے ملزمان کے ساتھ رمضان المبارک کے تقدس کو پامال کرتے ہوئے کولڈ ڈرنک کے مزے لینے میں مصروف تھے۔ صحافیوں کی جانب سے کھمبا چوری کی بابت سوال کرنے پر میپکو سب ڈویزن ہڑپہ کے ایس ڈی او اور لائن سپرنٹنڈنٹ نے چوروں کے ساتھ ملکر خوب بدمعاشی کی۔ چور چیخ چیخ کر کہتا رہا کہ ہاں میں نے کھمبا چوری کیا ہے جاؤ جو کرنا ہے کر لو اس کے باوجود بھی محکمہکی طرف سے پولیس کو استغاثہ نہ بھجوایا گیا۔ سب واقوعہ کی 35 منٹ کی ویڈیو بھی موجود ہے جسے جلد آن ائیر کیا جائیگا۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ عمران خان کا کرپشن فری پاکستان اور تبدیلی سرکار ان کرپٹ، چوروں، کے خلاف کیا کاروائی کرتی ہے۔

Post Top Ad

مینیو